کاتالونیا کا اسپین سے آزادی کا اعلان

Founder Editor Tazeen Akhtar..

بارسلونا (پی این پی): ہسپانوی علاقے کاتالونیا کی پارلیمنٹ نے ووٹنگ کے بعد اسپین سے آزادی کی باقاعدہ منظوری دیدی ہے جبکہ دوسری طرف سپین کے وزیراعظم نے کاتا لونیا کی پارلیمان کو تحلیل کر تے ہوئے 21دسمبر کو نئے انتخابات کروانے کا اعلان کر دیاہے۔ بارسلونا میں واقع کاتالونیا کی 135 رکنی پارلیمنٹ میں اسپین سے آزادی کے لیے ہونے والی ووٹنگ میں 70 اراکین نے آزادی کے حق میں ووٹ ڈالے جب کہ 10 اراکین نے آزادی کی مخالفت کی، دو اراکین نے خالی ووٹ بھی ڈالے۔دوسری جانب اسپین کی سینیٹ نے کاتالونیا پر براہ راست کنٹرول کی منظوری دے دی ہے۔ہسپانوی حکومت کے زیر اثر 17 خود مختار علاقے ہیں اور یہ پہلی مرتبہ ہو رہا ہے کہ اسپین کی سینیٹ نے کسی علاقے پر براہ راست کنٹرول کی منظوری دی ہو۔کاتالونیا کی پارلیمنٹ میں ووٹنگ کے فوراً بعد اسپین کے وزیراعظم ماریانو راجوائے نے عوام سے پرامن رہنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ کاتالونیا میں قانون کی عملداری کو بحال کیا جائے گا۔ یکم اکتوبر کو کاتالونیا میں آزادی کے لیے ہونے والے ریفرنڈم کو اسپین کی حکومت اور سپریم کورٹ غیر قانونی قرار دیتی ہیں۔