پاکستان کی آزادی کے بعد دفاع میں تعاون پر پولینڈ کے مشکور ہیں ،علی حیدر

Founder Editor Tazeen Akhtar..

اسلام آباد(نمائندہ خصوصی)وفاقی وزیر بحری امور علی حیدر زیدی نے کہا ہے کہ پاکستان پولینڈ کے ساتھ اپنے تعلقات کو خاص اہمیت دیتا ہے۔دونوں ملک مختلف شعبوں میں ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کررہے ہیں جس میں مزید اضافے کے وسیع امکانات موجود ہیں۔

وہ پولینڈ کی آزادی کے 100سال مکمل ہونے پر سفیر پیوٹراوپلنسکی کی طرف سے دیے گئے عشائیے کے موقع پر بطور مہمان خصوصی خطاب کررہے تھے۔انہوں نے اس اہم موقع پر پولینڈ کی حکومت اور عوام کو مبارک باد دی اور کہا کہ پولینڈ نے آزاد ی کے بعد محنت اور لگن کے ساتھ ترقی کی منازل طے کیں اور اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوایا۔انہوں نے پاکستان ایئر فورس ،نیوی اور خلائی تحقیق کے شعبے میں پولینڈ کے تعاون پر شکریہ اد اکیا ۔

سفیر پیوٹراوپلنسکی نے اردو میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 11نومبر1918ء کے دن پولینڈ قوم نے بڑی قربانیوں اور جدوجہد کے بعد دوبارہ آزادی حاصل کی اور اس کے بعد اپنے ملک کی ترقی کے لئے دن رات ایک کردیا ۔انہوں نے کہا کہ جنگ عظیم کے خاتمے کے بعد ہمارے بہت سے ماہرین اور افسران پاکستان میں قیام پذیر رہے جنہوں نے پاکستان ایئرفورس ،پاکستان نیوی اور سپیس پروگرام میں اپنی خدمات پیش کیں اور اس طرح پاکستان کی ترقی میں اپنا کردار ادا کیا۔ان میں سے کئی پاکستان ہی میں دفن ہوئے ۔ہمیں پاکستان کے ساتھ اس تعلق پر فخر ہے ۔

انہوں نے کہا کہ پولینڈ کی تاریخ ہزار سال پر مشتمل ہے ۔1791ء مئی میں پولینڈ دنیا کا پہلا ملک تھا جس نے اپنی قو م کو آئین دیا ۔بعدازاں بڑی طاقتوں نے پولینڈ کے حصے بخرے کردیے مگر ہماری قوم نے 123سال جدوجہد کی جس کے بعد 11نومبر1918ء کا یاد گار دن آیا اور پولینڈ دوبارہ آزاد ہوگیا۔سفیر نے کہا کہ آج کے دن ہم پولینڈ اور پاکستان کے گرم جوش تعلقات کو مزید مضبوط بنانے کا عہد کرتے ہیں۔

عشائیہ میں پاکستان کی تینوں مسلح افواج کی طرف سے حکام نے خصوصی شرکت کی جن میں میجر جنرل ارشد محمود وائس چیف آف جنرل اسٹاف نمایاں تھے۔

ان کے علاوہ کرنل (ر) اعظم خان بھی موجود تھے جن کی کتاب میں پولینڈ کے افسروں کے تعاون پر ایک باب موجود ہے ۔ایئر کموڈور (ر)سجاد حیدر نے بھی شرکت کی جن کے ساتھ پولینڈ کے افسروں نے پاکستان کے قیام کے بعد کام کیا ۔تقریب میں دیگر اعلیٰ حکام ،سفارتکاروں ،بزنس مین کمیونٹی ،صحافیوں اور معززین شہر نے شرکت کی۔

12 Nov 2018