احمدنوازسکھیرا انتظامی سیکرٹری کی تعیناتی ،انفارمیشن گروپ کی امیدوں پرپانی پھرگیا

Founder Editor Tazeen Akhtar..

اسلام آباد(تزئین اختر/نمائندہ خصوصی)وفاقی وزارت اطلاعات کی بحرانی کیفیت ختم ہوتی نظرنہیں آرہی کیونکہ مرکزی حکومت نے یکے بعددیگرے انفارمیشن گروپ کے بجائے انتظامی کیڈرکے ایک اورافسرکویہاں تعینات کرکے وفاقی سیکرٹری کی ذمہ داری سونپ دی ہے ۔اس طرح وفاقی سیکرٹری کے عہدے پرترقی کے منتظراورمستحق افسران کی رہی سہی امیدوں پربھی پانی پھرگیاہے ۔

چندہفتے قبل انفارمیشن گروپ کی افسرصباء محسن کوقائمقام سیکرٹری کی ذمہ داری سے ہٹاکرانتظامی سروس کے شعیب صدیقی کوچارج دیاگیااورانفارمیشن گروپ کے ترقی کے منتظرافسروں کونظراندازکردیاگیاتوانفارمیشن منسٹری میں مایوسی اورغم وغصے کی لہردوڑگئی جس کے بعدانفارمیشن گروپ کے افسروں نے چھٹیاں لے لیں یاکام بندکردیا۔یہاں تک کے بازوؤں پرسیاہ پٹیاں باندھ کراحتجاج بھی کیا۔اس کے بعدیہ سننے میں آیاکہ وزیراطلاعات مریم اورنگزیب اس حوالے سے وزیراعظم سے بات کررہی ہیں اورامیدہے کہ اس وزارت میں اسی گروپ کے افسرکووفاقی سیکرٹری کے عہدے پرترقی دی جائے گی مگرگزشتہ روزاس امیدپربھی اس وقت پانی پھرگیاجب انتظامی گروپ کے احمدنوازسکھیراکی تقرری کردی گئی ۔

احمدنوازسکھیرانے 1985میں پاکستان سول سروس جوائن کی ۔آپ سمیڈاکے چیف ایگزیکٹو،فیصل آبادشیخوپورہ کے ڈپٹی کمشنراورڈی سی اوگورنرپنجاب کے پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ پنجاب کے پی ایس او،صوبائی سیکرٹری عمل درآمد،ایڈیشنل فنانس سیکرٹری کے طورپرخدمات سرانجام دے چکے ہیں 1994میں ہارورڈیونیورسٹی سے ایم پی اے کی ڈگری حاصل کی 1993میں ولیمزکالج سے ڈویلپمنٹ اکنامکس میں ماسٹرزکیااکنامکس میں بیچلرآف سائنس ،لندن سکول آف اکنامکس سے صنعت وتجارت میں سپیشلائزیشن کرچکے ہیں ایچی سن کالج سے سکولنگ کی ۔ہارورڈیونیورسٹی میں اکنامکس پڑھاچکے ہیں ۔کالاباغ ڈیم ،متنازعہ مسائل اورحل کے طریقے کے عنوان سے ان کامقالہ نیپاپیپرزمیں شائع ہوچکاہے ۔

اس طرح احمدنوازسکھیرااپنے کریڈٹ پروسیع وعریض تجربہ اورعلم رکھتے ہیں مگراب دیکھنایہ ہے کہ وہ وزارت اطلاعات اوراس کے ذیلی محکموں کے افسران کوکس طرح ساتھ لے کرچلتے ہیں ۔اس حوالے سے صورتحال زیادہ خوشگوارنہیں ۔